وزیراعظم نےاسلام آباد میں اسپتال ٹک ٹاکر کے والد کو دے دیا

لاہور (ملتان ٹی وی ایچ ڈی ۔12 اکتوبر2020ء) سینئر صحافی ارشاد بھٹی کا کہنا ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے ایک ٹک ٹاکر کے والد کو پورا اسپتال دے دیا تھا۔تفصیلات کے مطابق پاکستان میں معروف ایپ ٹک ٹاک پر بندش کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے سینئر صحافی ارشاد بھٹی کا کہنا ہے کہ کہا جاتا ہے کہ وزیراعظم ڈیجیٹل کے لیے کام کیا،وزیراعظم نے ڈیجیٹل میڈیا کے لیے اتنا کام ضرور کیا کہ انہوں نے ایک ٹک ٹاکر کے والد کو اسلام آباد میں پورا اسپتال دے دیا تھا۔

ٹک ٹاکر کے والد نے اسپتال کا وہ حال کیا کہ عمران خان کو مجبوراََ واپس لینا پڑا۔ ارشاد بھٹی کا دعویٰ

انہوں نے کہا کہ عمران خان نے پورا اسپتال ٹک ٹاکر کے والد کے حوالے کیا لیکن پھر انہوں نے جو اسپتال کا حال کیا پھر مجبورا عمران خان کو واپس لینا پڑا۔یہ ایک بہت دلچسپ کہانی ہے۔ارشاد بھٹی نے مزید کہا کہ بھارت اور امریکا میں ٹک ٹاک بند کرنے کی مختلف وجوہات تھیں۔

ہمارے ہاں ایسا نہیں ہونا چہائیے کہ چو چیز پسند نہ ہو اسے بین کر دیں۔ٹک ٹاک کے لیے لوگوں کا فن بھی سامنے آ رہا تھا،ٹک ٹاک انتظامیہ نے پی ٹی اے کی شکایت پر کوئی کام نہیں کیا۔

پی ٹی اے نے کہا کہ ٹک ٹاک کو 3 بار وارننگ کے طور پر خط لکھا تھا۔

دوسری جانب فاقی وزیر برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی و کمیونیکیشن امین الحق نے ٹک ٹاک کی دوبارہ بحالی کا مشروط اعلان کردیا۔وفاقی وزیر آئی ٹی و ٹیلی کمیونیکیشن امین الحق کا اپنے بیان میں کہا کہ آئی ٹی منسٹری کسی بھی ایسی پابندی کے خلاف ہے جو ترقی کے عمل میں رکاوٹ بنے مگر ہم نے ٹک ٹاک کو پچھلے تین ماہ میں شیئرہونے والے مواد کے حوالے سے 2 بار خبردار کیا۔

انہوں نے کہاکہ وارننگ کے باوجود ٹک ٹاک انتظامیہ پاکستان کی جانب سے کی جانے والی شکایت اور پالیسی پر عمل درآمد نہیں کیا۔امین الحق نے واضح کیا کہ حکومت پاکستان سوشل میڈیا پر تین چیزیں برداشت نہیں کرے گی۔ انہوں نے بتایا کہ غیر اخلاقی مواد ، نفرت انگیز تقریر یا ایسا مواد جو ریاست پاکستان کے خلاف ہو اسے کے خلاف کارروائی ہوگی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *