چیئرمین نیب کی توسیع کا نیا حل نکال لیاگیا

اسلام آباد ( ملتان ٹی وی ایچ ڈی ) وفاقی حکومت نے چیئرمین نیب کی مدت ملازمت میں توسیع کے لیے نیا حل نکال لیا ۔ حکومت نے نیب ترمیمی آرڈیننس میں ترامیم کا مسودہ تیار کر لیا ۔ وزارت قانون نے نیب ترمیمی آرڈیننس کا حتمی مسودہ تیار کیا جس کے تحت موجودہ چیئرمین نیب کو مدت ملازمت میں توسیع دی جا سکے گی ۔

ذرائع کا دعویٰ ہے کہ نئے چیئرمین نیب کی تقرری کے لیے وزیر اعظم اور اپوزیشن لیڈر کی مشاورت قانون کا حصہ ہی رہے گی ، تاہم اگر مشاورت نہ ہو سکی تو تقرری کا معاملہ پارلیمانی کمیٹی کو بھجوایا جائے گا ۔ قانون میں نئی شق شامل کی گئی جس کے بعد نئے چیئرمین نیب کی تقرری کا فیصلہ ہونے تک پہلے چیئرمین نیب کام جاری رکھ سکیں گے ۔

واضح رہے موجودہ چیئرمین نیب کی مدت ملازمت 8 اکتوبر کو ختم ہو جائے گی ۔ تاہم آرڈیننس کے اطلاق کے بعد چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال نئے چیئرمین نیب کی تقرری تک کام جاری رکھ سکیں گے ۔ وزیر اطلاعات فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ یہ آرڈیننس کل پیش کیا جائے گا ۔ مجوزہ آرڈیننس کے مطابق نیب آئندہ ٹیکس کیسز کو ڈیل نہیں کر سکے گا ، ٹیکس سے متعلقہ کیسز فیڈرل بورڈ آف ریونیو کو بھجوائے جائیں گے ۔

نیب عدالتوں کے ججز کی تعیناتی کے لیے صوبائی چیف جسٹس سے مشاورت کی جائے گی ۔ اگر کسی ریٹائرڈ جج کو تعینات کرنا پڑا تو حکومت یہ کام خود کرے گی ۔ آرڈیننس کے مسودے کے مطابق ضمانت کا اختیار ٹرائل کورٹ کے دائرہ اختیار میں ہو گا ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *