میچز نہ ہونا مایوس کن لیکن کھلاڑیوں کا تحفظ سب سے اہم ہے، وزیراعظم نیوزی لینڈ

(ملتان ٹی وی ایچ ڈی 18ستمبر2021)جیسنڈا آرڈرن نے کہا کہ میں نے وزیر اعظم عمران خان سے گفتگو میں نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کا خیال رکھنے پر شکریہ ادا کیا۔
مزید پڑھیں: ‘سیکیورٹی خدشات’: نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم نے دورہ پاکستان منسوخ کردیا
انہوں نے کہا کہ مجھے اندازہ ہے کہ یہ سب کے لیے کتنا مایوس کن ہے کہ میچز نہیں کھیلے جائیں گے لیکن ہم فیصلے کی مکمل حمایت کرتے ہیں کیونکہ کھلاڑیوں کی حفاظت سب سے اہم ہے۔
واضح رہے کہ نیوزی لینڈ کی ٹیم تین ون ڈے اور پانچ ٹی20 میچوں کی سیریز کھیلنے پاکستان کے دورے پر آئی تھی۔
آج دونوں ٹیموں کے درمیان پہلا ون ڈے میچ شیڈول تھا لیکن میچ کے آغاز سے چند گھنٹے قبل نیوزی لینڈ نے سیکیورٹی خدشات کے باعث دورہ پاکستان منسوخ کردیا اور کیوی ٹیم وطن لوٹ گئی۔
پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) سے جاری بیان میں کہا گیا کہ ‘نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ نے آگاہ کیا ہے کہ انہیں سیکیورٹی کے حوالے سے الرٹ موصول ہوا ہے اس لیے یکطرفہ طور پر سیریز ملتوی کرنے کا فیصلہ کیا ہے’۔
یہ بھی پڑھیں: انگلینڈ کا دورہ پاکستان بھی خطرے میں، ’24 سے 48 گھنٹوں میں فیصلہ’ متوقع
نیوزی لینڈ کرکٹ کے چیف ایگزیکٹو ڈیوڈ وائٹ نے کہا کہ جو تجاویز ہمیں موصول ہوئیں اس کو مدنظر رکھتے ہوئے اس دورے کو جاری رکھنا ممکن نہیں تھا۔
ان کا کہنا تھا کہ ‘میں سمجھتا ہوں کہ یہ پی سی بی کے لیے ایک دھچکا ہوگا جو شاندار میزبان رہے ہیں تاہم کھلاڑیوں کی حفاظت سب سے اہم ہے اور ہمیں یقین ہے کہ یہ واحد آپشن ہے’۔
وزیر داخلہ شیخ رشید نے نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کے فیصلے کو یکطرفہ قرار دیتے ہوئے کہا تھا کہ نیوزی لینڈ کے دورہ پاکستان کو سازش کے تحت ختم کیا گیا۔
انہوں نے بتایا تھا کہ عمران خان کی بات پر نیوزی لینڈ کی وزیر اعظم نے کہا تھا کہ سیکیورٹی خطرات کا مسئلہ نہیں ہے لیکن ہمیں اس قسم کی اطلاع ہے کہ جب ٹیم باہر نکلے گی تو باہر اس پر کوئی حملہ ہو سکتا ہے لہٰذا انہوں نے یکطرفہ طور پر یہ دورہ منسوخ کردیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *